میرا کام وزیر اعظم کا استقبال کرنا نہیں ہے ۔۔۔وزیر اعظم کے دورہ امریکہ سے واپسی پر کس رہنما نے وزیر اعظم کا استقبال کرنے سے انکار کیا تھا؟ کئی دنوں بعد نیا پنڈوارا باکس کھل گیا

171

اسلام آباد (نیوز ڈیسک آن لائن)چند یوم قبل جب وزیر اعظم عمران خاں اپنا دورہ امریکہ کامیابی کے ساتھ مکمل کر کے وطن واپس لوٹے تو واپسی پر وفاقی کابینہ اور پاکستان تحریک انصاف کے دیگر رہنماؤں نے اُن کا ایئرپورٹ پر شاندار استقبال کیا تھا اور کامیاب دوورہ امریکہ پر اُنہیں دلی مبارک باد پیش کی تھے۔

وزیر اعظم عمران خاں کا استقبال کرنے والوں میں ڈاکٹر رمیشن کمار موجود نہیں تھے اب رمیش کمار کا کہنا ہے کہ جب وزیر اعظم عمران خاں اپنا دورہ امریکہ مکمل کرکے واپس پاکستان پہنچے تو میں ایئرپورٹ پر نہیں گیا تھا کیونکہ یہ کام میرا نہیں تھا تحریک انصاف کا یا کوئی اور رہنما سمجھتا ہے کہ امریکہ کے دورے سے واپسی پر وزیر اعظم عمران خاں کا استقبال کرنا چاہئے تھا تو یہ اُس کا اپنا قول و فعل ہےمیں اس پر کیا کہہ سکتا ہوں خاں صاحب اس کے ری ایکشن میں کسی کرپٹ کو رعائت دیں ایسا ممکن نہیں ہے۔ رمیش کمار کا مزید کہنا تھا وزیر اعظم کا دورہ امریکہ کرنا اور پاکستانی کی نمائندگی کرنا اُن کے فرائض میں شامل تھا میں نے بعد میں اُن کو ان کے کامیاب دورہ امریکہ پر مبارک باد دے دی تھی ۔ واضح رہے کہ رمیش کمار کا تعلق ہندو برادری سے ہے وہ مسلم لیگ ن کے دور میں رکن قومی اسمبلی بھی رہ چکے ہیں جب کہ الیکشن 2013 سے قبل وہ پاکستان مسلم لیگ ن کو چھوڑ کر پاکستان تحریک انصاف میں شامل ہو گئے تھے تاہم دورہ امریکہ سے کامیاب واپسی پر وزیر اعظم عمران خاں کا استقبال نہ کرنے پر اُن کو تنقید کا سامنا کرنا پڑا تھا۔

Facebook Comments