اتنی گرفتاریاں ہوں گی کہ ہمیں انٹرویو کے لئے ن لیگ کا کوئی بندہ نہیں ملے گا ۔۔۔۔ سینئر صحافی نے بڑا دعوی کر دیا

110

اسلام آباد (نیوز ڈیسک آن لائن) معروف صحافی و نامور تجزیہ نگار عارف نظامی نے کہا ہے کہ حکومت نے فیصلہ کیا ہے کہ اپوزیشن کے تمام رہنماؤں کو ایک ایک کر کے جیل میں ڈالنا ہے تاکہ کوئی کسی قسم کا احتجاج نہ کر سکے اُنہوں نے کہا کہ شاہدد خاقان عباسی پہلے ہمارے پروگرام میں آیا کرتے تھے آج وہ نہیں آئے اُنہیں گرفتار کرلیا گیا ہے۔

سینئر صحافی عارف نظامی نے کہا کہ اتنی گرفتاریاں ہوں گی کہ ہمیں انٹرویو کے لئے ن لیگ کا کوئی آدمی نہیں ملے گا۔ واضح رہے کہ جمعرات کے دن سابق وزیر اعظم شاہد خاقان عباسی کو لاہور کے قریب ٹول پلازہ سے نیب نے ایل این جی کیس میں گرفتار کر لیا تھا اس وقت وہ 13 روزہ جسمانی ریمانڈ پر نیب کی حراست میں ہیں نیب نے اُنہیں صبح 10 بجے طلب کیا تھا مگر وہ پیش نہیں ہوئے تھے اس سے قبل ن لیگ کے قائد سابق وزیر اعظم نواز شریف ، خواجہ سعد رفیق ، خواجہ سلمان رفیق ، حمزہ شہباز، رانا ثناء اللہ، آصف زرادری وغیرہ جیل میں ہیں۔ جب سے تحریک انصاف کی حکومت آئی ہے گرفتاریوں کا عمل خاصا تیز ہو چکا ہے حکومت کی جانب سے علیم خاں کو گرفتار کیا گیا تھا وہ ضمانت پر رہا ہو چکے ہیں جبکہ اب صوبائی وزیر جنگلات سبطین خاں نیب کی حراست میں ہیں اس کے علاوہ پرویز خٹک اور مخدوم خسرو بختیار وغیرہ کے خلاف نیب میں کیسز چل رہے ہیں جن کو بھی گرفتار کیا جا سکتا ہے جبکہ مولانا فضل الرحمن کے خلاف بھی کشمیر کمیٹی کی سربراہی کے دوران آمدن سے زائد اثاثے بنانے کی انکوائری ہو رہی ہے

Facebook Comments